ھرنیا کے مرض کا قرآنی علاج! یہ آیت مبارکہ پڑھ کر دم کریں

ھرنیا کے علاج کے لیے قرآن کا وظیفہ بتا تے ہیں۔اگر کوئی بچہ یا بڑا ہے جو کہ ہرنیا کے مرض میں مبتلا ہے وہ قرآنی وظیفے کو پورے یقین اور کامل طریقے کے ساتھ اور اللہ تعا لیٰ کی رحمت سے باامید ہوکر پڑھ لینا ہے۔ انشاءاللہ اس وظیفے کی برکت سے شفاء مل جائےگی۔ یہ عمل بہت ہی آسان ہے۔ اس عمل کو کرنے کےلیے اجازت کی ضرورت نہیں ہے۔

جو بھی اس پر عمل کو کرنا چاہتاہو۔وہ بغیر اجازت لیے اس عمل کو کر سکتا ہے۔ اس کے علاوہ جتنے بھی مسلمان بہن بھائی اس مرض میں مبتلا ہیں وہ اس عمل کو کرکے شفاءیاب ہو سکتے ہیں۔قرآن مجید کا پارہ 28کی سورت انعام کی آیت 45کو پڑھنا ہے۔ اس کے تلفظ میں کوئی کمی نہیں آنی چاہیے۔ اس آیت میں کوئی زبر زیر میں فرق نہیں آنا چاہیے۔ اس آیت کو اکیس بار ہر نماز کے بعد پڑھ کر مریض پر دم کر دینا ہے۔ جہاں پر بھی مرض ہو اس متاثرہ حصے پر دم کر دینا ہے۔ یعنی پھونک ماردینی ہے۔ جب بھی نماز کے بعد اس آیت کو پڑھیں گے تو اس عمل کے اول و آخر درود ابراہیمی پڑھ لینا ہے۔ اگر کوئی مریض اس آیت کو پڑھ کر خود پر دم نہیں کرسکتاہے یا کوئی چھوٹا بچہ ہے جو اس عمل کو نہیں کرسکتا ہے تو کوئی دوسرا شخص بھی اس آیت مبارکہ کو ہر نماز کے بعد پڑھ کر دم کردے۔

اسی طرح کوئی بڑا یا کوئی بزرگ ہیں جو اس عمل کو نہیں کر سکتا تو کوئی دوسرا اس آیت کو اکیس بار پڑھ کر دم کر دے۔اس عمل کو آپ نے اکیس سے چالیس روز تک کرتے رہنا ہے۔ اس عمل کو باقاعدگی کے ساتھ کیجیے۔اگر اکیس روز تک آپ کو بہتر ی محسوس نہ ہوتو کچھ روز اور جاری رکھے۔اورچالیس روز مکمل کریں۔ انشاءاللہ عزوجل ان قرآنی آیتوں کی برکتوں سے اللہ تبارک وتعالیٰ کے فضل وکر م سے ہر نیا کے مرض سے ضرور شفاء مل جائے گی۔ یقین کے ساتھ اور خلوص نیت کے ساتھ، اللہ تبارک وتعالیٰ کی ذات پریقین رکھتے ہوئے یہ عمل کریں گے۔آپ کو اس عمل کا ضرور فائد ہ حاصل ہوگا۔ ہر نیا کے علاج کے لیے ایک دوسرا وظیفہ ہے جس میں آپریشن کی ضرورت نہیں ہے۔ بس یہ عمل کریں۔ انشاءاللہ جو بھی گھٹلی ہوگی وہ خود ہی ختم ہو جائے گی۔

یہ عمل آپ کسی بھی وقت کرسکتے ہیں۔اس عمل میں سورت طٰحہٰ کی آیات 105 سے 108 تک زیتون کے تیل پر گیارہ مرتبہ پڑھ کر دم کر لیں۔ زیتون کے تیل کے علاوہ کوئی دوسرا تیل نہیں چلے گا۔ یہ خاص تیل ہوتا ہے اللہ تعا لیٰ نے اس میں شفاء رکھی ہے۔ پھر جہاں پر گھٹلی نکلی ہے وہاں پر مالش کرنی ہے۔ گھٹلی جسم کے کسی بھی حصے پر نکلی ہو۔وہاں پر اس تیل کی مالش کر سکتے ہیں۔اس عمل دن میں ایک مرتبہ کرنا ہے۔ اور اس عمل کو مسلسل اکیس روز تک کرنا ہے۔ جو عورتیں خو د کرنا چا ہتی ہوں وہ پاکی کی حالت میں کر سکتے ہیں اگر ناپاکی کی حالت میں ہیں تو وہ کسی دوسرے سے بھی کروا سکتے ہیں۔ انشاء اللہ اس عمل کی برکت سے جو گھٹلی نکلی ہوئی ہوگی۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.