کھٹی ڈکار کا علاج:رمضان کا خاص دیسی نسخہ

عام طور پر لوگ دن بھر میں 5 سے 15 بار گیس خارج کرتے ہیں مگر کئی بار یہ مقدار زیادہ بھی ہوسکتی ہیں۔ کھانا یا پینا پیٹ میں

گیس بنانے کے لیے کافی ہوتا ہے، جب کوئی فرد کچھ کھاتا یا پیتا ہے تو اس کے ساتھ کچھ مقدار میں ہوا بھی نگل لیتا ہے، جسے جسم ڈکار کی شکل میں خارج کرتا ہے یا وہ آنتوں میں جاکر گیس کی شکل اختیار کرلیتی ہے جو ریح کی صورت میں خارج ہوتی ہے۔ یعنی گیس کا اخراج نظام ہاضمہ کی قدرتی سرگرمی ہے اکثر افراد کو پیٹ میں زیادہ گیس کا مسئلہ اس وقت ہوتا ہے

جب وہ اپنی غذا میں تبدیلیاں کرتے ہیں، جیسے گوشت چھوڑ کر صرف سبزیوں تک محدود ہوجانا، مختلف غذائی گروپس سے دوری اختیار کرلینا یا نئی غذاﺅں کو آزمانا۔آج ہم آپ کو امراض معدہ کے حوالے سے بات کریں گے جوکہ ایک پھکی کا نسخہ ہے آپ کو جونسخہ بتائیں گے یہ گیس اپھارہ اور پیٹ کا پھولنا یا بدہضمی کا ہوجانا او ر سینے میں جلن تیزابیت جتنے بھی مسائل آجاتے ہیں ان تمام پر زبردست کا رزلٹ ہے ۔ ایک بہت اہم بات بتائیں گے کہ جتنی بھی پھکیاں ہوتی ہیں یہ بلیڈ پریشر کے مریض استعمال نہیں کرسکتے ۔ تقریباً پھکیوں میں جو نوے فیصد جو پھکیاں بنائی جاتی ہیں ان میں نمک کا استعمال کیا جاتا ہے

آج جو پھکی کا نسخہ دینے جارہے ہیں ہائی بلیڈ پریشر کے مریض استعمال کرسکتے ہیں کیونکہ ان کا بلیڈ پریشر ہائی نہیں ہونے والا اس میں کسی قسم کا کوئی نمک استعمال نہیں کیا گیا ہے ۔ جوکہ ایک بلیڈ پریشر کا مریض آسانی سے استعمال کرسکتا ہے جن پھکیوں میں بہت زیادہ نمک ہوتے ہیں وہ کم استعمال کرنی چاہیں کیونکہ وہ تیزابیت کم کرنے کی بجائے وہ تیزابیت کو زیادہ کردیتی ہیں۔ ہمیں جن چیزیوں کی ضرورت ہوگی وہ سات سے آٹھ چیزیں ہیں نمبر ایک پر ہمیں سونف20گرام ،سوئے20گرام، کشنیز40گرام، اجوائن20گرام، دارچینی20گرام،نوشادرٹھیکری10گرام،پودینہ خشک10گرام،میٹھاسوڈا40گرام لینے ہونگے ۔

پھر آپ نے یہ کرنا ہے کہ ان کا سفوف بنا لینا ہے آپ کا جو سفوف ہاضم تیار ہوجائیگا ۔ آپ اس کو وقطی بھی استعمال کرسکتے ہیں کہ گھر میں کسی کے پیٹ میں درد ہے اس کو استعمال کراسکتے ہیں۔ اس کے علاوہ بدہضمی رہتیہے یا کھٹی ڈکاریں وغیرہ اس کا مسئلہ ہوتو مستقل طریقہ سے استعمال کرسکتے ہیں۔  افطاری میں بد پرہیزی سے ہونے والی مسائل کے لئے اسے افطاری کے 30 منٹ بعد استعمال کریں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.