عرق گلاب سے جگر کا ہر مرض جڑ سے ختم ہوگا جگر کی کوئی بھی بیماری ہوتو فوراً یہ کرلیں

جگر کی خطرناک سے خطرناک بیماری جڑ سے ختم کرنیکا مجرب طبعی روحانی عمل

انشاء اللہ رپورٹس بھی کلیئر ہونگی ۔آپ نے روحانی عمل سورۃ یونس کی آیت نمبر64 یہ آپ نے 41مرتبہ پڑھنی ہے ۔یہ پڑھنے کے بعد آپ نے آدھا کپ عرق گلاب لینا ہے ۔ایک گلاس سادہ پانی لینا ہے دونوں کو مکس کرنا ہے ۔ آپ نے آیت پڑھ

اس مکس کیے ہوئے پانی پر اس گلاس کے پانی پر دم کرلینا ہے ۔آپ نے یہ پانی دن بھر میں تھوڑا تھوڑا پانی پینا ہے اور 41دن متواتر یہ عمل کرنا ہے ۔ انشاء اللہ آپ کو حیرت انگیز رزلٹ آئینگے اور اللہ تعالیٰ آپ کو شفاء عطاء فرمائیں گے۔

یہاں جگر کو نقصان پہنچنے کی ایسی ہی خاموش علامات کا ذکر کیا گیا ہے جن سے واقفیت ہر ایک کے لیے ضروری ہے۔ہر ایک کو کسی نہ کسی وقت تھکاوٹ کا سامنا ہوتا ہی ہے مگر جگر کے امراض کے باعث جس تکان کا تجربہ ہوتا ہے وہ بالکل متختلف ہوتی ہے۔ جگر میں خرابی کی صورت میں یہ عضو توانائی پر کنٹرول کرکے دن کو پورا کرنا انتہائی مشکل بنا دیتا ہے۔ کافی اور دیگر کیفین والے مشروبات جگر کی حالت کو زیادہ بدترین بنادیتے ہیں، لہذا توانائی کو واپس حاصل کرنے کے لیے پانی، پھل اور صحت مند پروٹین تک محدود رہیں۔پلیٹ لیٹس خون کے اندر وہ ننھے ذرات ہوتے ہیں جو جریان خون سے موت کے خطرے کو ٹالنے کے لیے ضروری ہیں۔ جگر کے بیشتر مریضوں میں پلیٹ لیٹس کی کمی ہوجاتی ہے اور یہ جگر کے امراض کی شناخت کا بھی بڑا ذریعہ ثابت ہوتے ہیں۔

قے کا احساس ہونا کسی کے لیے بھی خوشگوار ثابت نہیں ہوتا اور جگر کے امراض کے شکار افراد کو اس کا تجربہ اکثر ہوتا ہے۔جب آپ کے جسم کے مختلف حصے سوجنا خاص طور پر ٹانگوں کا سوجنا جگر کے امراض میں عام ہوتا ہے۔ اگر آپ کے پیر اکثر سوج جاتے ہیں تو روزانہ 20 منٹ تک چہل قدمی کو عادت بنانے سے خون کی روانی کو ٹانگوں میں بہتر بنایا جاسکتا ہے۔یرقان کے مرض سے تو سب ہی واقف ہیں اور بالغ افراد کو اس کا تجربہ عام طور پر اس وقت ہوتا ہے جب ان کے جگر کے اندر کچھ گڑبڑ چل رہی ہو۔ اس مرض میں جلد کی رنگت بدلنے لگتی ہے اور وہ چند گھنٹوں یا دنوں میں زرد یا اورنج شیڈ کی ہوجاتی ہے۔جگر کے مختلف امراض کے شکار افراد میں خون کی بیماریاں بھی پیدا ہوجاتی ہیں، جیسے خون زیادہ بہنے لگتا ہے یا بغیر کسی وجہ کہ جلد پر خراشیں پڑجانا وغیرہ۔ اگر آپ ایسا ہوتے دیکھیں اور جلد پر خراش کی کوئی وجہ نہ مل سکے تو ڈاکٹر سے ایک بار ضرور مشورہ لیں۔

عام طور پر جب نظام ہاضمہ میں کسی قسم کی خرابی ہو تو ہیضہ سب سے پہلی نشانی ہوتا ہے جو آپ کو چوکنا کرنے کی کوشش کررہی ہوتی ہے۔اگر آپ کا معدہ تکلیف کا شکار ہو تو کھانا ذہن میں آنے والی آخری چیز ہوسکتا ہے۔ یہ حیران کن امر نہیں کہ جگر کے امراض میں مبتلا بیشتر افراد کو جسمانی وزن میں کمی اور کھانے کی خواہش ختم ہونے کا سامنا علاج سے قبل، اس کے دوران اور بعد میں کرنا پڑتا ہے۔نوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین اس حوالے سے اپنے معالج سے بھی ضرور مشورہ لیں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.